ن لیگ کے 25 قومی و صوبائی ارکان اسمبلی رابطے میں ہیں، راجا بشارت کا دعویٰ

صوبہ پنجاب کے وزیر قانون راجا بشارت نے دعویٰ کیا ہے کہ اپوزیشن کی جماعت مسلم لیگ (ن) سے تعلق رکھنے والے قومی اور صوبائی اسمبلی کے ارکان وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے رابطے میں ہیں۔

صوبائی وزیر راجا بشارت نے انکشاف کیا کہ گزشتہ 2 ہفتوں میں ن لیگ کے 10 ارکان قومی و صوبائی اسمبلی وزیراعلیٰ نے پنجاب سے ملاقات کرکے وزیراعلیٰ کو اپنے حلقوں کے مسائل پیش کیے۔

راجا بشارت نے دعویٰ کیا کہ ن لیگ کے ارکان اسمبلی نے وزیراعلیٰ سے ملاقات میں اپنی پارٹی قیادت کے بیانیے کی مخالفت کی جبکہ دو درجن سے زائد لیگی ارکان پہلے ہی وزیراعلیٰ پنجاب سے ملاقات کر چکے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مزید کئی ن لیگی ارکان اسمبلی پارٹی قیادت کےبیانیے کے حق میں نہیں وہ بھی جلد ملیں گے، مسلم لیگ ن کے اندر دو دھڑے موجود ہیں، ایک دھڑا تصادم کے خلاف ہے۔

اس موقع پر مسلم لیگ (ن) کے باغی رکن پنجاب اسمبلی جلیل شرقپوری کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کے 30 سے زائد پارلیمینٹیرینز وزیراعلیٰ پنجاب سے رابطے میں ہیں اور ان پارلیمینٹیرینز کی وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے ملاقاتیں بھی ہو چکیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے سربراہی اجلاس کے بعد پریس کانفرنس میں اتحاد کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے تمام جماعتوں کے قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے ارکان کو استعفے پارٹی قیادت کو جمع کرانے کی ہدایت کی تھی۔

انہوں نے ہدایت کی کہ 31 دسمبر تک تمام جماعتوں کے قومی و صوبائی اسمبلیوں کے ارکان پارٹی قائدین کے پاس استعفے جمع کرادیں۔

اس اعلان سے قبل ہی اپوزیشن ارکان کے استعفے آنے شروع ہوگئے تھے تاہم اب ارکان کی بڑی تعداد نے اپنے اپنے استعفے سوشل میڈیا پر شیئر کردیے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو