پرائیویسی کی خلاف ورزی پہ فرانس میں گوگل اور ایمازون پر 135 ملین یورو کے جرمانے

صارفین کی پرائیویسی کی خلاف ورزی کرنے پر ڈیٹا پرائیویسی ریگولیٹر نے گوگل پر 100 ملین یورو اور ایمازون پر 35 ملین یورو کا جرمانہ عائد کردیا ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق فرانس کے ڈیٹا پرائیویسی ریگولیٹر نے صارفین کی پرائیویسی کی خلاف ورزی پر بین الاقوامی ٹیکنالوجی کمپنیوں گوگل اور ایمازون پر بھاری جرمانے عائد کردیے۔

فرانس کی جانب سے گوگل کے دو مخلتف یونٹس کو 100 ملین یورو جبکہ ایمازون کی ایک کمپنی پر 35 ملین یورو کا جرمانہ عائد کربدیا ہے۔

پرائیویسی ریگولیٹرکے مطابق گوگل نے ستمبر کے ماہ سے لے کر اب تک متعدد تبدیلیاں کی ہیں۔ کمپنیوں نے صارفین کی اجازت کے بغیر ان کے براؤزرز میں اشتہارات کی کوکیز لگائیں۔

اس متعلق گوگل نے اپنے بیان میں کہا کہ ہمارے پاس واضح معلومات مہیا کرنے سمیت واضح کنٹرول، مضبوط داخلی ڈیٹا گورننس، محفوظ انفراسٹرکچر اور سب سے بڑھ کر مددگار مصنوعات فراہم کرنے کا ریکارڈ قائم ہے، اس لیے فرانسیسی قوانین اور ریگولیٹری رہنمائی غیر یقینی ہے۔

ایمازون نے بھی اس متعلق کہا کہ ہم اپنے پرائیویسی طریقہ کار کو مستقل طور پر اپ ڈیٹ کرتے ہیں تاکہ ہم یہ یقینی بنائیں کہ ہم کسٹمرز اور ریگولیٹرز کی ضروریات اور توقعات کو پورا کریں اور ساتھ ساتھ ہم جس بھی ملک میں کام کرتے ہیں اس میں تمام قابل اطلاق قوانین کی مکمل تعمیل کریں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو