پاکستان نے مذہبی آزادیوں سے متعلق امریکی رپورٹ مسترد کردی

پاکستان نے مذہبی آزادیوں سے متعلق امریکی محکمہ خارجہ کی رپورٹ مسترد کردی۔

ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ چوہدری نے ایک بیان میں کہا ہےکہ پاکستان مذہبی آزادی سے متعلق امریکی من مانی اور من پسند قانون سازی کو مسترد کرتا ہے، امریکی رپورٹ میں پاکستان پر اظہار تشویش زمینی حقائق کے برخلاف ہے۔

ترجمان کا کہنا ہےکہ بھارت میں مذہبی آزادی کا فقدان اور اقلیتوں پر جاری مظالم امریکی رپورٹ پر کڑا سوال ہیں، بھارت میں راشٹریہ سویم سیوک سنگھ ( آر ایس ایس) اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی حکومت مذہبی آزادی کو کھلے عام نظر انداز کر رہی ہے۔

ترجمان کے مطابق مذہبی آزادیوں سے متعلق غیرحقیقی تعین دنیا بھر میں مذہبی آزادی کو فروغ دینے میں معاون نہیں، پاکستانی معاشرہ بین المذاہب ہم آہنگی کا بھر پور عکاس ہے اور پاکستانی قانون مذہبی آزادی اور اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ کی ضمانت دیتا ہے۔

دفتر خارجہ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ پاکستان کو امریکی اقدام کی ساکھ کے بارے میں شدید شکوک و شبہات ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو