شوگر کی بیماری؛ پاؤں کے زخموں سے ہر سال 4 لاکھ افراد معذور ہونے لگے

پاکستان میں ہر سال ذیابیطس کے نتیجے میں ہونے والے پاؤں کے زخموں کی وجہ سے 4 لاکھ افراد اپنی ٹانگوں یا پاؤں کے کچھ حصوں سے محروم ہوجاتے ہیں جب کہ بروقت آگاہی اور علاج کی معیاری سہولیات سے لاکھوں افراد کے پاؤں اور ٹانگیں کٹنے سے بچائی جاسکتی ہیں 3 ہزار فٹ کلینکس قائم کرکے ہزاروں افراد کی ٹانگیں کٹنے سے بچا کر لاکھوں لوگوں کو غربت کی لکیر سے نیچے جانے سے بچایا جاسکتا ہے۔

ذیابیطس کے نتیجے میں پاؤں میں ہونے والے زخموں کے بعد پاؤں اور ٹانگیں کٹنے کے نتیجے میں 4 لاکھ افراد میں سے 30 فیصد افراد ایک سال کے اندر انتقال کرجاتے ہیں، جبکہ 70 فیصد افراد 5 سال کے اندر دم توڑ دیتے ہیں، پورے ملک میں 3000 خصوصی ماہرین کی ضرورت ہے جن کے ذریعے صرف لاکھوں لوگوں کو معذور ہونے سے بچایا جا سکتا ہے. ذیابیطس کے علاج کے ماہر ڈاکٹرز کو ڈاکٹروں، نرسوں اور ٹیکنیشنز کو ضروری آگاہی اور تربیت دینی چاہئیے. پاکستان کیں ایک ادارے نے پاؤں کے زخموں سے بچانے کے لیے خصوصی جوتے تیار کرنے کے ادارے بھی قائم کیے ہیں. جہاں سے چند سو روپے کے عوض ایسے جوتے اور سول تیار ہوتے ہیں، جس کے نتیجے میں پاؤں کی بہتر حفاظت ہوتی ہے. کچھ مقامات پہ ڈاکٹرز، نرسز اور ٹیکنیشنز کی تربیت سے مریضوں میں ٹانگیں کٹنے کی شرح میں 50 فیصد تک کمی آگئی ہے۔

شوگر کی وجہ سے کئی ہزار لوگوں کے پاؤں کی ہڈیوں میں فریکچر اور جوڑوں میں ٹوٹ پھوٹ کا عمل بھی شروع ہو جاتا ہے جس کے نتیجے میں وہ مستقل معذور ہو جاتے ہیں اگر اس مرض کو ابتدائی مرحلے میں تشخیص کرلیا جائے تو لوگوں کو معذوری سے بچایا جا سکتا ہے۔

کورونا وائرس کی وبا کے نتیجے میں پابندیوں سے ہزاروں مریض اسپتالوں اور کلینکس نہ جاسکے جن زخم مزید خراب ہوئے، لیکن اب ہر مریض کو اسپتال جانے کی ضرورت نہیں بلکہ انٹرنیٹ اور ٹیلی ہیلتھ کے ذریعے ایسے مریض ڈاکٹروں اور ماہرین سے مشورہ کرکے اپنے گھروں پر اپنا علاج خود کرسکتے ہیں۔

کانفرنسز، سیمینارز، وبینارز کا انعقاد ہو آ چاہئیے، جن کے نتیجے میں نہ صرف ڈاکٹروں بلکہ شوگر کے مرض میں مبتلا لاکھوں افراد کو فائدہ ہو اور وہ ناصرف اپنے پاؤں میں ہونے والے زخموں سے بچ سکیں بلکہ جن لوگوں کو یہ زخم ہو چکے ہیں وہ بھی بہتر نگہداشت کے ذریعے اپنی ٹانگوں کو کٹنے سے بچا کر صحت مند زندگی گزار سکیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو