امریکا نے کورونا قرنطینہ کی مدت 14 روز سے کم کردی

امریکا میں بیماریوں سے بچاؤ اور تحفظ کے مرکز (سی ڈی سی) نے کورونا مریضوں کیلئے قرنطینہ کی مدت 14 دن سے کم کردی۔

اپنی نئی گائیڈلائنز میں امریکی ادارے ’سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول اینڈ پری وینشن‘ کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے مریض 14 کے بجائے 7 سے 10 روز تک قرنطینہ میں رہیں گے۔

گائیڈ لائنز میں کہا گیا ہے کہ کورونا ٹیسٹ منفی آنے اور علامات نہ ہونے کی صورت میں 7 روز میں آئسولیشن ختم کی جاسکتی ہے جبکہ جو بغیر ٹیسٹ کے قرنطینہ میں ہیں وہ 10 روز بعد آئسولیش ختم کریں گے اور 4 روز تک علامات کو مانیٹر کرنا ہوگا۔

سی ڈی سی کے مطابق زیادہ دنوں تک قرنطینہ میں رہنا کچھ افراد کے لیے بوجھ کا باعث بن رہا تھا تاہم ادارے نے اس بات کو بھی تسلیم کیا ہے کہ اس طرح ہم بیماری پھیلنے کا رسک بھی لے رہے ہیں۔

خیال رہے کہ دنیا بھر میں کورونا وائرس کے متاثر مریضوں کیلئے کم از کم 14 روز تک قرنطینہ میں رہنا ضروری قرار دیا گیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو