لاہور ہائیکورٹ نے توشہ خانہ کے تحائف کی 25 نومبر کو ہونے والی نیلامی روک دی

لاہور ہائیکورٹ نے توشہ خانہ کے تحائف کی 25 نومبر کو ہونے والی نیلامی روک دی ہے۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس قاسم خان نے یہ حکم امتناع مقامی وکیل عدنان پراچہ کی رٹ پٹیشن پر جاری کیا۔

عدالت نے اٹارنی جنرل سے 9 دسمبر کو جواب طلب کر لیا۔

خیال رہے کہ یہ تحائف صدر، وزیر اعظم اور اعلیٰ سرکاری شخصیات کو بیرون ملک دوروں کے دوران ملے تھے۔

درخواست گزار نے توشہ خانہ کے تحائف کی نیلامی کے حکومتی فیصلے کو امتیازی، غیر قانونی اور بنیادی حقوق کے منافی قرار دیتے ہوئے چیلنج کیا تھا۔

کابینہ ڈویژن نے 172 میں سے 15 تحائف کی 4 سے 6 نومبر کے دوران اسلام آباد میں نمائش کی تھی، ان تحائف میں دستی گھڑیاں، ہار، انگوٹھیاں، قالین، خنجر اور بندوقیں شامل ہیں۔

اس نیلامی کیلئے 23 نومبر تک سر بمہر پیشکشیں داخل کرانے اور 25 نومبر کو پیشکشیں کھولنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔

تاہم چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ نے نیلامی کو آرٹیکل 25 کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے روک دیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو