ایاز صادق نے ‘ابھی نندن’ سے متعلق بیان میں آرمی چیف کا نام نہیں لیا: فواد چوہدری

وفاقی وزير سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ ایاز صادق نے قومی اسمبلی میں خطاب کے دوران ابھی نندن سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا نام ہی نہیں لیا۔

ایک بھارتی ٹی وی چینل پر گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ جیسے بھارت میں سیاست دان ایک دوسرےکی ٹانگ کھینچتے ہیں، پاکستان میں بھی ایسا ہی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ سیاست دان ایک دوسرے کو نیچا دکھانے کے لیے ایسے بیانات دیتے ہیں۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ایاز صادق نے آرمی چیف کا نام ہی نہیں لیا، ایاز صادق ہمارے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو کہہ رہے تھے، اس لیے کہ وہ ہمارے خلاف ہیں۔

خیال رہے کہ سابق اسپیکر قومی اسمبلی اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما ایاز صادق نے گذشتہ دنوں قومی اسمبلی میں دعویٰ کیا تھا کہ حکومت نے گھٹنے ٹیک کر بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو واپس بھارت بھیجا۔

ایاز صادق کا کہنا تھا کہ میٹنگ میں وزیراعظم نے آنے سے انکار کردیا تھا مگر آرمی چیف اس میں شریک تھے، پسینے میں شرابور وزیر خارجہ شاہ محمود نے کہا تھا کہ خدا کے واسطے ابھی نندن کو واپس جانے دیں، آج رات 9 بجے بھارت حملہ کررہا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو