حکومت کی حکمت عملی ہےکہ فوج اور عدلیہ کو ن لیگ سے لڑایا جائے: احسن اقبال

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے جنرل سیکرٹری احسن اقبال نےکہا ہےکہ حکومت کو نواز شریف فوبیا ہو گیا ہے، کابینہ میں عوامی مسائل کے حل کی بجائے نواز شریف ڈسکس ہوتا ہے۔

نارووال میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال کا کہنا تھا کہ حکومتی وزیر، مشیر غداری کے سرٹیفکیٹ دینا بند کریں جس ملک میں غداری کے سرٹیفکیٹ ایسے بانٹے جائیں اس کا اللہ ہی حافظ ہے۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ اگر کوئی یہ کہتا ہے کہ مسلم لیگ ن کی لڑائی فوج کے ساتھ ہے تو وہ اپنے دماغ کا علاج کرائے، حکومت کی حکمت عملی ہے کہ افواج پاکستان اور عدلیہ کو مسلم لیگ ن سے لڑایا جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ ناکامیوں کا جواب دینے کے بجائے عمران خان کا ایک ہی مؤقف ہے کہ این آر او نہیں دوں گا، تم اپنا این آر او اپنے پاس رکھو اور اپنے وزیروں اور مشیروں کو دو۔

سیکرٹری جنرل مسلم لیگ ن کا کہنا تھا کہ جب سے اپوزیشن کی آل پارٹیز کانفرنس (اے پی سی) کا انعقاد ہوا ہے، حکمران بوکھلاہٹ کا شکار ہیں، جب سے یہ آئے ہیں غریب مزید بدحال ہو گیا ہے جب کہ ہمارے دور میں متوسط طبقہ غربت سے نکل رہا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو