شہباز شریف کی اہلیہ اور بیٹی کے بھی ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

احتساب عدالت، لاہور نے منی لانڈرنگ کیس میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کی اہلیہ نصرت شہباز اور صاحبزادی رابعہ عمران کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دئیے۔

احتساب عدالت نے منی لانڈرنگ ریفرنس پر سماعت کرتے ہوئے نصرت شہباز اور رابعہ عمران کے ناقابلِ ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر تے ہوئے انہیں گرفتار کر کے عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا۔

سلیمان شہباز اور ہارون یوسف سے متعلق رپورٹ پیش نہ کیے جانے پر عدالت نے آئندہ سماعت پر دفترِ خارجہ کے ذمہ دار افسر کو ریکارڈ سمیت طلب کر لیا۔

عدالت نے شہباز شریف کی صاحبزادی جویریہ کی مستقل حاضری سے معافی کی درخواست منظور کرتے ہوئے ریفرنس پر مزید سماعت 5 اکتوبر تک ملتوی کردی۔

یہ گیدڑوں کی حکومت ہے، ہم نہ ڈریں گے، نہ جھکیں گے: سلیمان

دوسری جانب شہباز شریف کے صاحبزادے سلیمان شہباز نے ردعمل میں کہا ہے کہ میری والدہ اور بہنوں کے وارنٹ جاری کیے گئے، یہ گیدڑوں کی حکومت ہے، ہم نہ ڈریں گے نہ جھکیں گے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز لاہور ہائیکورٹ نے منی لانڈرنگ کیس میں مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی عبوری ضمانت میں توسیع کی درخواست مسترد کردی تھی جس پر قومی احتساب بیورو (نیب) نے کمرہ عدالت سے انہیں گرفتار کیا تھا۔

قائد حزب اختلاف کو آج احتساب عدالت میں پیش کیا گیا جہاں عدالت نے انہیں 14 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا اور انہیں 13 اکتوبر کو دوبارہ پیش کرنےکی ہدایت کی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو