وفاقی حکومت کا رویت ہلال کمیٹی کی از سرنو تشکیل کا فیصلہ

وفاقی حکومت نے رویت ہلال کمیٹی کے حوالے سے نئی قانون سازی کا فیصلہ کرلیا ہے۔

ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت نے رویت ہلال کمیٹی کو ختم کرکے اسے دوبارہ تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ رویت ہلال کے ازخود اعلان پر 5 سال تک قید اور 50 ہزار سے 2 لاکھ روپے تک جرمانے کی سزا کی تجویز دی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق وزارت مذہبی امور کو رویت ہلال کمیٹی کا قانونی مسودہ مل چکا ہے جسے کمیٹی کو بجھوا دیا گیا ہے۔

وزارت مذہبی امور کی کمیٹی جلد اس مسودے پر اپنی تجاویز سے وفاقی حکومت کو آگاہ کرے گی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو