پاکستانی سائنس دان امریکی یونیورسٹی میں پہلی خاتون ڈین مقرر

پاکستان سے تعلق رکھنے والی معروف فلکی طبیعیات داں نرگس ماولوالا کو میسا چوسٹس انسٹیٹوٹ آف ٹیکنالوجی کے اسکول آف سائنس کی ڈین مقرر کردیا گیا ہے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا کی عالمی شہرت یافتہ نجی ریسرچ یونیورسٹی ’’ میساچوسٹس انسٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی‘‘ (MIT) کے اسکول آف سائنس کی ڈین کے لیے معروف پاکستانی سائنس دان نرگس ماولوالا کی تقرری کی گئی ہے۔

میسا چوسٹس انسٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کی تاریخ میں پہلی بار کسی خاتون کو اسکول آف سائنس کی ڈین مقرر کیا گیا ہے اور یہ اعزاز 52 سالہ پاکستانی سائنس دان نرگس ماولوالا کے حصے میں آیا ہے۔

لاہور میں پیدا اور کراچی میں پلی بڑھی نرگس ماول والا 2015ء سے ایم آئی ٹی میں شعبہ فزکس کی ایسوسی ایٹ ہیڈ ہیں۔

نرگس ماولوالا نے ابتدائی تعلیم کراچی میں مکمل کی اور 1986ء میں امریکا چلی گئی تھیں، جہاں انہوں نے فلکیات میں گریجویشن کی اور ایم آئی ٹی سے طبیعیات میں پی ایچ ڈی کرنے کے بعد اسی ادارے میں درس و تدریس اور تحقیق سے وابستہ ہوگئی تھیں۔

نرگس ماولوالا 2002ء سے میساچوسٹس انسٹیٹیوٹ سے وابستہ ہیں تاہم انہیں عالمی شہرت کشش ثقل کی لہروں کا پتہ لگانے کے لیے ایک پروٹو ٹائپ لیزر انٹر فرو میٹر بنانے کے بعد ملی تھی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو