بی آر ٹی اسٹیشن پر توڑ پھوڑ کی ویڈیو وائرل، گارڈز پر تشدد کا مقدمہ درج

پولیس نے پشاور بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آر ٹی) اسٹیشن میں توڑ پھوڑ اور سیکیورٹی گارڈز پر تشدد کا مقدمہ درج کرلیا۔

گزشتہ روز پشاور بی آر ٹی اسٹیشن میں سیکیورٹی گارڈ پر تشدد کی ویڈیو سامنے آئی تھی جس میں چند افراد نے سیکیورٹی گارڈز کو زدوکوب کیا اور کپڑے پھاڑے۔

پشاور میں بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آر ٹی) کے اسٹیشنوں پر مسافروں کی توڑ پھوڑ کی ویڈیوز وائرل ہو گئیں۔

ویڈیو میں ایک مسافر کو بی آر ٹی بس کی چھت پر چڑھتے دیکھا جا سکتا ہے جب کہ ایک جگہ شہریوں کو جنگلا پھلانگ کر مین کوریڈور میں آتے دیکھا جا سکتا ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ایک اور ویڈیو میں مسافروں کو بی آر ٹی کے سفری کارڈز کے بغیر اندر داخل ہوتے بھی دیکھا جاسکتا ہے جب کہ سوشل میڈیا پر بی آر ٹی بسوں کی پھٹی ہوئی سیٹوں کی تصاویر بھی وائرل ہو رہی ہیں۔

پولیس نے اسٹیشن میں تصادم میں ملوث 2 افراد کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرلیا ہے۔

دوسری جانب سینیئر سپرٹنڈنٹ آف پولیس (ایس ایس پی) آپریشنز منصور امان نے مختلف بی آر ٹی اسٹیشنز کا دورہ کیا اور سیکیورٹی کا جائزہ لیا۔

انہوں نے بتایا کہ بی آر ٹی کے تمام اسٹیشنز پر پولیس اہلکار تعینات کر دیے گئے ہیں اور ہر اسٹیشن پر 4 اہلکار تعینات ہوں گے اور 2 شفٹوں میں 240 پولیس اہلکار ڈیوٹی دیں گے۔

ان کا کہنا ہے کہ ناخوشگوار صورتحال سے نمٹنے کے لیے پیٹرولنگ پولیس بھی ہوگی جب کہ بی آرٹی کنٹرول روم میں پولیس فوکل پرسن بھی تعینات کردیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ پشاور بس منصوبے کا افتتاح 13 اگست کو ہی کیا گیا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو