پنجاب میں تعلیمی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے ایس او پیز جاری

حکومت پنجاب نے تعلیمی سرگرمیوں کی بحالی کے سلسلے میں تعلیمی اداروں کے لیے ضابطہ کار جاری کر دیے۔

پنجاب میں تعلیمی اداروں کے لیے ایس او پیز کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا جس میں اسکول انتظامیہ کو ہدایت کی گئی ہے کہ بچوں کو احتیاطی تدابیر سے آگاہی دیں، بچے کسی بھی چیز کو پکڑنے یا چھونے سے پرہیز کریں، بچوں کو بار بار صابن سے ہاتھ دھونےکی تلقین کی جائے اور انہیں بتایا جائے کہ اسکول سے واپسی پر گھر والوں سے میل جول سے قبل نہالیں۔

نوٹیفکیشن میں ہدایت کی گئی ہے کہ بغیر ہاتھ دھوئے آنکھوں، ناک اور منہ کو چھونے سے پرہیز کریں، سانس کے مسائل سے دوچار اسٹاف اور بچوں کو مکمل صحت یاب ہونے تک گھر پہ رہنے کی تلقین کی جائے۔

ایس او پیز کے تحت اساتذہ کو لیکچر کے دوران ماسک پہننا لازم ہوگا، جب کہ 6 فٹ فاصلہ قائم رکھنے کے لیے اسکولوں میں نشانات لگائے جائیں اور صبح کی اسمبلی سے گریز کیا جائے. کلاس رومز، لائبریری، اسٹاف روم، لیبارٹری میں سماجی فاصلے کا خیال رکھا جائے۔

نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ اسکول میں چھٹی کے وقت ایک سے زائد خارجی راستے استعمال کیے جائیں، چھوٹے بچوں کو کھیل کود کی سرگرمیوں میں مشغول نہ کیا جائے جب کہ اسکول وین یا بس میں گنجائش سے 50 فیصد کم بچے بٹھائے جائیں اور ہوسٹلز کو صرف 30 فیصد پُر کیا جائے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق تعلیمی اداروں میں داخل ہونے سے پہلے ٹمپریچر لازمی چیک کیا جائے گا، تعلیمی اداروں میں فرش پر قالین بچھانےکی اجازت نہیں ہوگی جب کہ پک اینڈ ڈراپ گاڑیوں کی دن میں دوبار ڈس انفیکشن یقینی بنائی جائے۔

خیال رہے کہ ملک بھر میں کورونا وائرس کی وجہ سے تمام تر تعلیمی ادارے بند تھے جب کہ اب صورتحال کے پیش نظر 15 ستمبر سے ملک بھر میں اسکول کھولنے پر غور کیا جا رہا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو