روس کا کل دنیا کی پہلی کورونا وائرس ویکسین لانچ کرنے کا اعلان

روس نے کورونا وائرس کے علاج کے لیے تیار اپنی ویکسین کے تمام تجرباتی مراحل مکمل ہونے پر کل اسے لانچ کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق کورونا ویکسین ماسکو کی گامالیا انسٹی ٹیوٹ اور روسی وزرات دفاع کے اشتراک سے بنائی گئی ہے جس کے تینوں تجرباتی مراحل مکمل کر لیے گئے ہیں۔

روسی نائب وزیر صحت کا کہنا ہے کہ کہ تیار کردہ کورونا ویکسین کے انسانوں پر تینوں کلینیکل ٹرائلز کامیابی کے ساتھ مکمل کر لیے گئے ہیں اور اب اسے کل مارکیٹ میں پیش کردیا جائے گا۔

دوسری جانب فلپائن کے صدر رودریگو نے روس کی کورونا وائرس کے علاج کے لیے بنائی گئی ویکسین خریدنے کی آفر بھی قبول کر لی ہے۔

فلپائن کے صدر کا کہنا ہے کہ وہ رضاکارانہ طور پر پوری عوام کے سامنے ویکسین کا استعمال سب سے پہلے خود کریں گے۔

روسی صدر ولادی میر پیوٹن کا اس حوالے سے اپنے ایک بیان میں کہنا ہے کہ میری بیٹی اُن افراد میں شامل ہے، جنہیں سب سے پہلے اس ویکسین کا انجیکشن لگایا گیا۔

انہوں نے کہا کہ روس کی تیار کی ہوئی ویکسین کو روسی وزارت صحت نے رجسٹرڈ کرا لیا، روسی ویکسین کے نتائج انتہائی حوصلہ افزا ہیں۔

روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ روسی ویکسین سے کورونا کےخلاف قوت مدافعت بڑھےگی۔

اس حوالے سے گمالیہ نیشنل ریسرچ سینٹر کے سربراہ الیگزینڈر گینٹز برگ نے بتایا کہ ویکسین ایڈینو وائرس کی بنیاد پر تیار کی گئی ہے جس میں کووڈ-19 کے مردہ مریضوں کے کورونا وائرس کے ذرات بھی شامل ہیں۔ یہ ذرات کورونا وائرس کے جسم میں داخل ہونے کی صورت میں مدافعتی نظال کو فعال کردیتے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو