کورونا نے دنیا کے جھوٹ بےنقاب کردیئے، اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے کہا ہے کورونا کی وبا نے معاشرے کی کمزوریاں سب کے سامنے اجاگر اور دنیا کے جھوٹ بے نقاب کردیئے۔

انتونیو گوتریس نےسالانہ نیلسن منڈیلا لیکچر میں کہا کہ امیر ملک ٹیسٹنگ، علاج کی سہولتیں اور دوائیں اپنے لیے مخصوص کر رہے ہیں، ترقی یافتہ اور امیر ملک کثیر سرمایہ کاری صرف اپنے تحفظ کیلئے کر رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ امیر ملک موجودہ خطرناک صورتِحال میں کمزور ملکوں کی مدد میں ناکام ہوگئے اور کورونا نے یہ جھوٹ بے نقاب کردیا کہ آزاد معیشت ’’سب کیلئے صحت‘‘ کی ضامن ہے۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کا کہنا تھا کہ کورونا نے اس فریب سے پردہ ہٹادیا کہ موجودہ دنیا نسل پرستی کے بعد والی دنیا ہے، کورونا نے یہ جھوٹ بھی بے نقاب کیا کہ ساری دنیا کے انسان ایک کشتی کے سوار ہیں۔

کورونا وائرس کی وباء سے دنیا میں کئی تبدیلیاں آئی ہیں اور آ رہی ہیں.

سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ نوجوان، خواتین، بیمار، مشکلات میں گھرے افراد کو باوقار زندگی دینا ہوگی۔

انھوں نے یہ بھی کہا کہ مشکلات کا شکار اقلیتوں کو بھی باوقار زندگی دینا ہوگی۔

سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ باعزت زندگی کے لیے معاشروں میں نیا عمرانی معاہدہ ناگزیر ہے۔

انتونیو گوئترس نے کہا کہ ایسا معاشرہ جس میں نوجوان باوقار انداز سے رہ سکیں اور جس میں خواتین کو مردوں کے برابر مواقع میسر ہوں۔

سیکریٹری جنرل کا کہنا تھا کہ ایسا معاشرہ جہاں بیمار، مشکل میں پھنسے اور تمام اقلیتوں کو تحفظ حاصل ہو۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو