سعودی عرب نے بین الاقوامی پروازوں کی بحالی کی خبروں کی تردید کردی

سعودی انتظامیہ نے آج سے بین الاقوامی پروازوں کی بحالی کی خبروں کی تردید کردی ہے۔

دارالحکومت ریاض کے کنگ خالد انٹرنیشنل ائیرپورٹ کی انتظامیہ کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ 8 جون سے کنگ خالد ائیرپورٹ کو بین الاقوامی پروازوں کی آمدورفت کے لیے نہیں کھولا جارہا۔

ریاض ائیرپورٹ کمپنی نے وضاحت کی ہے کہ سوشل میڈیا پر سول ایوی ایشن کے جس خط کی بنیاد پر بین الاقوامی پروازوں کی بحالی کا دعوٰی کیا جارہا ہے وہ صرف سعودی شہریوں کو بیرون ملک سے وطن واپس لانے اور اپنے وطن واپسی کے خواہش مند غیر ملکیوں کے لیے خصوصی پروازوں سے متعلق ہے۔

کنگ خالد انٹرنیشنل ائیرپورٹ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ جب متعلقہ ادارے فیصلہ کرلیں گے تو پھر معمول کی بین الاقوامی پروازوں کی بحالی کا اعلان کردیا جائے گا۔

یاد رہے کہ سعودی حکومت نے کورونا وائرس کے باعث مملکت میں لاک ڈاؤن کے اعلان کے ساتھ ہی 15 مارچ سے پروازیں معطل کرنے کا اعلان کیا تھا جب کہ اس دوران مختلف ممالک میں پھنسے سعودی شہریوں کو وطن واپس لانے کے لئے سعودی ائیرلائنز کی جانب سے خصوصی پروازیں چلائی جارہی ہیں اور غیر ملکی شہریوں کو وطن بھیجنے کے لئے بھی خصوصی پروازوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ 5 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے جب کہ 746 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

تبصرہ کرنے سے پہلے آپ کا لاگ ان ہونا ضروری ہے۔

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو