کینیڈا میں فائرنگ سے 16 افراد ہلاک

پولیس نے 12 گھنٹے تک مسلح حملہ آور کا تعاقب کیا اور بالآخر اسے بھی ہلاک کردیا گیا۔ (فوٹو: انٹرنیٹ)

پولیس نے 12 گھنٹے تک مسلح حملہ آور کا تعاقب کیا اور بالآخر اسے بھی ہلاک کردیا گیا۔ (فوٹو: انٹرنیٹ)

نووا اسکوٹیا: کینیڈا کے صوبے نووا اسکوچیا میں ایک مسلح شخص نے اندھا دھند فائرنگ کرکے کم از کم 16 افراد کو ہلاک کردیا ہے جن میں ایک خاتون پولیس افسر بھی شامل ہیں۔

کینیڈین پولیس کے مطابق، یہ شخص بظاہر ایک پولیس کار میں سوار تھا اور حملہ آور نے پولیس کا یونیفارم پہن کر عوام پر فائرنگ کی. جس نے نووا اسکوچیا کے قصبے پورٹاپیک میں مختلف مقامات فائرنگ کرکے لوگوں کو قتل کیا۔

پولیس نے 12 گھنٹے تک اس کا تعاقب کیا اور بالآخر اس حملہ آور کو بھی ہلاک کردیا گیا۔ مقامی پولیس کا کہنا ہے کہ اب تک 16 افراد کے مرنے کی مصدقہ اطلاع ہے لیکن مزید ہلاکتوں کا خدشہ ہے۔

نووا اسکوچیا پولیس کا کہنا ہے کہ مسلح حملہ آور کی شناخت 51 سالہ گیبریل وورٹمین کے نام سے ہوئی ہے تاہم اب تک یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ اس حملے کے محرکات کیا تھے۔ یہ جاننے کےلیے تفتیش جاری ہے۔

واضح رہے کہ امریکا کے برعکس کینیڈا میں مسلح وارداتوں کے واقعات بہت کم ہوتے ہیں کیونکہ وہاں بندوقوں کی خرید و فروخت اور استعمال سے متعلق قوانین بھی بہت سخت ہیں۔ ماضی میں زیادہ ہلاکتوں کی وجہ بننے دو بڑے واقعات بالترتیب 1989ء اور 2019ء میں ہوئے تھے۔

حملہ آور نے پولیس کی وردی پہن رکھی تھی اور اس نے حملے کے لیے پولیس کی ہی گاڑی کو استعمال کیا۔ فوٹو: کینیڈین پولیس۔

کینیڈا کی فیڈرل پولیس کے مطابق فائرنگ کا واقعہ نووا اسکاشیا کے قصبے پورٹاپک میں پیش آیا جہاں ہلاک افراد کی لاشیں ایک گھر کے باہر اور اندر سے ملیں۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق حملہ آور نے پولیس کی وردی پہن رکھی تھی اور اس نے حملے کے لیے پولیس کی ہی گاڑی کو استعمال کیا۔

کمشنر رائل پولیس کا کہنا ہے کہ فائرنگ کے واقعے میں خاتون پولیس افسر سمیت 16 افراد ہلاک ہوئے اور ایک پولیس افسر زخمی بھی ہوا۔

حملے میں ہلاک ہونے والی خاتون پولیس افسر۔ فوٹو: کینیڈین پولیس

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

تبصرہ کرنے سے پہلے آپ کا لاگ ان ہونا ضروری ہے۔

اسی طرح کی مزید پوسٹس

مینو