پی ٹی آئی آزاد کشمیر کے انتخابات میں مرضی کے نتائج چاہتی ہے، وزیراعظم فاروق حیدر، آزاد کشمیر

وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کا کہنا ہے ہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) حکومت آزادکشمیر کے انتخابات میں مرضی کے نتائج حاصل کرنا چاہتی ہے۔

وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کا کہنا تھاکہ عمران خان بطور وزیراعظم الیکشن میں مداخلت کریں گے تو ہم لحاظ ختم کردیں گے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان الٹے لٹک کر بھی آجائیں تو بھی آزاد کشمیر صوبہ نہیں بن سکتا۔

راجا فاروق حیدر کا کہنا تھا کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کی طرف سے آزاد کشمیر کے الیکشن ملتوی کرنے کا خط لکھا، این سی او سی نے کہا کہ 2 ماہ کیلئے انتخابات ملتوی کردیں لیکن الیکشن صرف اسی صورت ملتوی ہوسکتے ہیں جب بیرونی جارحیت ہو۔

ان کا کہنا تھا کہ اس قسم کے خط آزاد کشمیر کے ووٹرز کی توہین ہیں، یہ اختیار آزاد کشمیر کی قانون ساز اسمبلی کو حاصل ہے، حکومت گلگت بلتستان کی طرح آزاد کشمیر کے الیکشن ملتوی کرانا چاہتی ہے تاکہ مسلم لیگ ن میں توڑ پھوڑ کی جائے تاہم یہ طریقہ آزاد کشمیر میں سیاسی کشیدگی پیدا کرے گا۔

وزیراعظم آزاد کشمیر کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان آزادکشمیرکے انتخابات کے قوانین سے باخبر ہی نہیں، آزاد کشمیر کا اپنا الیکشن کمیشن ہے جس میں پاکستان کا کوئی دخل نہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ کہتے ہیں آزادکشمیر میں کرپٹ حکومت کا خاتمہ کریں گے، میرا ایک وزیر آدھا گھنٹہ پہلے تک کرپٹ تھا، پھر وزیراعظم نے ان کے گلے میں پٹا ڈالا. جو وزراء کل تحریک انصاف میں شامل ہوئے، انہوں نے مسلم لیگ ن اور نواز شریف سے وفاداری کاحلف اٹھایا، حلف اپنی مرضی سے سب نے اٹھایا، کسی کو مجبور نہیں کیا گیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو