ممبئی کی طوفانی بارش نے 22 سالہ ریکارڈ توڑ ڈالا، کرین حادثہ، ہلاکتیں

ممبئی میں گزشتہ روز ہونے والی طوفانی بارش نے اگست کے سیزن میں ہونے والی بارشوں کا 22 سالہ ریکارڈ توڑ دیا۔

گزشتہ روز دے جاری طوفانی بارش کے سبب دریاؤں میں پانی کی سطح خطرناک حد تک بلند ہوگئی ہے، جبکہ جھیلوں کا پانی بھی حفاظتی دیواروں سے باہر نکل آیا ہے۔

ممبئی کے کچھ علاقوں میں گزشتہ روز 331 ملی میٹر تک بارش ریکارڈ کی گئی، بارش اور طوفانی ہواؤں سے نظام زندگی درہم برہم ہوگیا، سڑکیں ٹوٹ گئیں، اسٹیڈیم کو بھی نقصان پہنچا ہے۔

بارش کے پانی میں پھنسی دو مسافر ٹرینوں سے 1300 افراد کو ریسکیو کیا گیا ہے، سڑکوں پر پانی جمع سے نشیبی علاقوں میں گھروں اور اسپتال میں پانی داخل ہوگیا ہے۔

ممبئی میں آج بھی بارش کی پیش گوئی ہے جبکہ متعدد سڑکیں اب بھی زیر آب ہیں۔

بھارتی شہر ممبئی میں تیز ہواؤں سے بندرگاہ پر کھڑی تین کرینیں گر گئیں، حادثے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

کرینیں گرنے کا حادثہ ممبئی کی جواہر لعل نہرو بندرگاہ پر پیش آیا۔

بندرگاہ حکام کے مطابق موسلا دھار بارشیں اور طوفانی ہوائیں کرینیں گرنے کا سبب بنیں۔ حکام کا کہنا ہے کہ حادثے میں ہونے والے نقصانات کا جائزہ لیا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ چند روز قبل بھارتی بندرگاہ وشاکاپٹنم کے شپ یارڈ میں کرین گرنے سے 11 مزدور ہلاک ہوگئے تھے۔

بھارتی حکام کے مطابق حادثہ ہفتے کے روز اس وقت پیش آیا جب نئی کرین آزمائش کے دوران گر گئی۔

حادثے میں کم از کم 11 افراد ہلاک ہوئے، جن میں 4 شپ یارڈ اور 7 کنٹریکٹ ملازمین تھے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو