فراڈیئے عاشق نے 20 مالدار عورتوں سے کروڑوں روپے ٹھگ لیے

چند ہفتے قبل چینی پولیس نے صوبہ ہینان کے شہر ژنگژاؤ سے ایک ایسے شخص کو گرفتار کیا ہے جو پچھلے دو سال میں کم از کم 20 مالدار عورتوں کو اپنی جھوٹی محبت کے جال میں پھنسا کر ان سے لاکھوں ڈالر جتنی رقم بٹور چکا ہے۔

چائینیز میڈیا میں اس شخص کا نام ژانگ نان بتایا گیا ہے جو 2019 سے مختلف امیر عورتوں کے ساتھ دوستی کرکے لاکھوں ڈالر لوٹ چکا ہے۔

ایسی ہی ایک خاتون سے تو وہ 90 لاکھ یوآن (13 لاکھ امریکی ڈالر) جتنی رقم تحفے تحائف اور نقد صورت میں بٹور چکا ہے۔

چینی پولیس کے مطابق، اس شخص کا طریقہ واردات خاصا لگا بندھا ہوا کرتا تھا۔ سب سے پہلے یہ کسی ایسی مالدار عورت کو تلاش کرتا جو اکیلی رہتی ہو یا پھر کسی جذباتی صدمے سے گزر رہی ہو۔

اس کے بعد وہ کسی نہ کسی طرح اس عورت سے دوستی کرکے اسے باور کراتا ہے کہ وہ خود بھی بہت مالدار ہے اور اس عورت سے ’’سچی محبت‘‘ کرتا ہے۔

کبھی وہ خود کو مالدار تاجر کا بیٹا یا پوتا ظاہر کرتا تو کسی عورت کو یہ بتاتا کہ وہ خود کوئی بہت ہی اثر و رسوخ والا سرکاری افسر ہے یا سرکاری افسر کا بیٹا ہے۔

بعض مالدار خواتین کو اپنی محبت کے جال میں پھنسانے کےلیے پہلے وہ اُن پر قیمتی تحفے تحائف کی برسات تک کرکے انہیں یقین دلاتا کہ وہ سچا ہے اور ان سے سچی محبت کرتا ہے۔

اعتماد قائم ہوجانے کے بعد وہ مختلف بہانوں سے ان خواتین سے بھاری رقم بٹورتا رہتا۔

ایک خاتون کو اپنی سچائی کا یقین دلانے کےلیے اس نے اپنے والدین اور گھر والوں تک سے ملوایا جو شہر سے باہر کسی قصبے کے معمولی گھر میں رہتے تھے جبکہ اس کے باپ کے پاس بھی نہایت معمولی قسم کی گاڑی تھی۔

اس عورت کا شک دور کرنے کےلیے ژانگ نان نے جواز پیش کیا کہ اس کے والد ایک بہت بڑے سرکاری ٹھیکیدار ہیں اور اگر وہ قیمتی گاڑیوں میں گھومنے لگے یا انہوں نے خوبصورت گھر بنالیا تو وہ ارد گرد رہنے والوں اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی نظروں میں آسکتے ہیں۔

پولیس تفتیش کے دوران ایک حیرت انگیز انکشاف یہ بھی ہوا کہ اس مکار شخص نے ایک ہی عمارت کی تین الگ الگ منزلوں پر رہنے والی خواتین کو ایک ساتھ اپنے عشق کے جال میں پھنسایا اور لاکھوں ڈالر بھی اینٹھے۔

ژانگ نان کا پول اس وقت کھلا جب گزشتہ ماہ اس کی ایک محبوبہ نے پولیس کو اس کے خلاف درخواست دی، جس میں یہ مؤقف اختیار کیا کہ اس شخص نے جھوٹ بول کر اس سے تقریباً ایک کروڑ 95 لاکھ یوآن (30 لاکھ ڈالر) اینٹھ لیے ہیں۔

تفتیش آگے بڑھنے پر اس ایک شخص کے ہاتھوں خطیر رقم سے محروم ہونے والی مزید 19 عورتوں کا علم ہوچکا ہے جبکہ ژانگ نان اس وقت پولیس کی حراست میں ہے۔

چینی میڈیا نےحال ہی میں ایک ایسے اوباش چینی شخص کی کہانی کیا ہے جس نے ایک ساتھ درجنوں خواتین کو پیار کا جھانسہ دے کر 2 سال کے مختصرعرصے میں ان کے لاکھوں ڈالرز ہڑپ لیے۔

20 مارچ کو چینی شہری زینگ کے خلاف پولیس اسٹیشن میں ایک خاتون کی جانب سے شکایت درج کروائی گئی جس میں خاتون نے بتایا کہ ان کے بوائے فرینڈ نے ان سے 9 ملین یو آن ( 1.3ملین ڈالر )کی دھوکہ دہی کی۔

خاتون کا کہنا تھا زینگ نے ان سے مشہور شخصیت کا بیٹا اور پتا ہونے کا دعویٰ کیا تھا اور کئی بار بھاری قیمت مانگی۔

خاتون نے تفتیش کاروں کو بتایا کہ وہ زینگ سے 2019ء میں ملی تھی انہیں وہ اچھا لگا اور دونوں میں رابطہ ہوا جس کے بعد وہ زینگ کی جھوٹی محبت کے جال میں پھنس گئیں۔ خاتون نے پولیس کو مزید بتایا کہ زینگ نے 2 سال کے دوران اپنی ملازمت میں ترقی اور دیگر وجوہات کی جھوٹی کہانی بنا کر ان سے 30 لاکھ یوآن ہڑپ لیے۔

پولیس کو فراڈیے شخص کی شکایات موصول ہونے کے بعد دوران تفتیش پتا چلا کہ زینگ یہ سب سوچی سمجھی منصوبہ بندی کے تحت کرتا تھا۔

ایک روز زینگ کے موبائل پر ایک خاتون کی کال آئی جو اس کی گرل فرینڈ نے اٹھائی، موبائل فون پر موجود خاتون نے زینگ کی گرل فرینڈ ہونے کا دعویٰ کیا، حیران کن طور پر یہ دونوں خواتین ایک ہی عمارت میں رہائش پذیر تھیں تاہم اگلے ہی دن جب دونوں خواتین کی ملاقات ہوئی تو پتا چلا کہ زینگ اس وقت اسی عمارت کی تیسری خاتون کے ساتھ ڈیٹ پر تھا۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق زینگ کی ایک محبوبہ عمارت کی دسویں، دوسری سترہویں اور تیسری محبوبہ اسی عمارت کی 18ویں منزل پر رہائش پذیر تھی۔

پولیس کی تحقیقات کے بعد زینگ کے 20 مزید ایسے اسکینڈلز سامنے آئے جن میں وہ خواتین کو اپنی محبت کے جال میں پھنساکر لوٹتا تھا، پولیس نے دھوکہ دہی کے کیس میں اسے گرفتار کرلیا۔

دورانِ تفتیش اس نے پولیس کو بتایا کہ وہ جو رقم بھی ٹھگتا تھا، اسے وہ عیاشی اور جوئے میں اُڑا دیا کرتا تھا، لہذا اس کے پاس ’’لوٹ کا مال‘‘ بالکل بھی موجود نہیں۔ اس بات کی تصدیق زانگ نان کے بینک اکاؤنٹ سے بھی ہوئی، جس میں معمولی رقم ہی موجود تھی۔

اس کیس کے بعد چینی محکمہ پولیس نے خواتین کو خبردار کیا ہے کہ وہ چاہے جذباتی طور پر کتنی ہی کمزور اور تنہائی کا شکار کیوں نہ ہوں، لیکن ہمدردی کرنے والے انجان لوگوں سے ہوشیار رہیں کیونکہ اس طرح کے لوگ بعد میں دھوکے باز اور فراڈیئے نکل سکتے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو