عرب ممالک کے بعد جنوبی ایشیائی ملک نے بھی اسرائیل سے سفارتی تعلق قائم کرلیا

متحدہ عرب امارات، بحرین، سوڈان اور مراکش کے بعد اسرائیل اور بھوٹان کے درمیان بھی سفارتی تعلقات قائم ہوگئے۔

رپورٹس کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان گزشتہ ایک سال سے مذاکرات جاری تھے اور اب باقاعدہ طور پر سفارتی تعلقات قائم کرلیے گئے ہیں۔

اسرائیل اور بھوٹان کے درمیان معاہدے کی تقریب بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی میں اسرائیلی سفیر کے گھر منعقد ہوئی جس میں دونوں ممالک کے سفراء نے دستخط کیے۔

اس موقع پر اسرائیلی وزیر خارجہ نے بھوٹان سے سفارتی تعلقات قائم کرنے کے فیصلے پر خوشی کا اظہار کیا اور بھوٹان کو واٹر منیجمنٹ، زراعت اور صحت کے شعبے میں مل کر کام کرنے کی پیشکش کی۔

اسرائیل کی جانب سے فی الحال واضح نہیں کیا گیا کہ بھوٹان کے دارالحکومت تھمبو میں سفارتخانہ کھولا جائے گا یا نہیں یا پھر بھارت میں اسرائیلی سفیر کو ہی سری لنکا کی طرح وہاں بھی نان ریزیڈینس سفیر مقرر کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ ریاست بھوٹان کے اب تک دنیاکے صرف 53 ممالک سے سفارتی تعلقات ہیں جبکہ پڑوسی ملک چین سمیت امریکا، برطانیہ، فرانس اور روس سے بھی سفارتی تعلقات نہیں ہیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ 2 ماہ کے دوران اب تک 4 عرب ممالک اسرائیل کو تسلیم کرنے کا اعلان کرچکے ہیں جن میں متحدہ عرب امارات، بحرین، سوڈان اور مراکش شامل ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو