روس میں مسلح شخص کا اسکول پر حملہ، 10 سے زائد بچے ہلاک

روس کے شہر قازان میں مسلح نوجوان نے اسکول میں گھس کر اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں طلبا اور استاد سمیت 12 افراد ہلاک اور 16 زخمی ہوگئے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق روس کے شہر کے قازان کے ایک پرائمری اسکول میں مسلح افراد دیوار پھلانگ کر داخل ہوا اور بچوں پر اندھا دھند فائرنگ کردی۔

مسلح افراد کی فائرنگ سے 12 ہلاکتیں ہوئیں جن میں 8 اسکول کے بچے 2 اساتذہ اور ایک گارڈ شامل ہے۔ 21 افراد کو زخمی حالت میں اسپتال لایا گیا ہے جن میں 18 بچے اور 3 اساتذہ شامل ہیں۔ 6 بچوں کو انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں منتقل کیا گیا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں دو بچوں کو فائرنگ کی آواز سے خوف زدہ ہوکر دوسری منزل سے چھلانک لگا کر نیچے گرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے جب کہ ایک ویڈیو میں پولیس ملزم کو زمین پر لٹا کر گرفتار کرتی دکھائی دے رہی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ایک حملہ آور کو گرفتار کرلیا ہے جس کی عمر 19 سال بتائی جارہی ہے۔ ملزم سے تفتیش جاری ہے تاحال حملے کی وجہ کا تعین نہیں ہوسکا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو