رمضان کی 27ویں شب بھی اسرائیلی فورسز اور فلسطینی نمازیوں میں جھڑپیں

رمضان کی 27 ویں شب بیت المقدس میں عبادت کرنے والے نمازیوں پر اسرائیلی فوج کی اسٹن گرینیڈ اور ربر کی گولیوں سے فائرنگ اور مسجد اقصیٰ کے احاطے میں اسرائیلی فوج سے شدید جھڑپوں میں سو فلسطینی زخمی ہوگئے۔

جمعہ کو بھی تین سو فلسطینیوں کو زخمی کیا گیا تھا، اسرائیلی جارحیت کے خلاف غزہ میں احتجاج کیا گیا اور ٹائر جلا کر سڑکیں بلاک کی گئیں۔

ادھر عیسائیوں کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس نے تشدد ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔ انھوں نے مقدس سرزمین پر بھائی چارہ برقرار رکھنے کے لیے مشترکہ قرارداد کی دعوت دے دی۔

فلسطین کی درخواست پر عرب لیگ کا ہنگامی اجلاس کل قاہرہ میں طلب کیا گیا ہے۔

تیونس نے اقوام متحدہ سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس بھی پیر کو بلانے کا مطالبہ کر دیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو