حکومتی معاشی اعداد و شمار ناقابل اعتبار اور قوم سے دھوکا ہیں، شہباز شریف

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے معاشی اعداد و شمار پر حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا ہے۔

شہبازشریف کی زیرصدارت مسلم لیگ ن کی اکنامک ایڈوائزری کونسل کا ورچوئل اجلاس ہوا جس میں اسحاق ڈار، شاہد خاقان عباسی، احسن اقبال، مفتاح اسماعیل، مشاہد حسین سید اور محمد زبیر سمیت دیگر نے شرکت کی۔

اعلامیے کے مطابق اجلاس میں ملک کی مجموعی معاشی صورتحال کا تفصیلی جائزہ لیا گیا اور سابق وزرائے خزانہ نے اجلاس کو ملک کے معاشی حقائق کے بارے میں بریفنگ دی جبکہ اجلاس میں بجٹ کے موقع پرعوامی مفادات کے تحفظ کیلئے سفارشات پر بھی غور کیا گیا۔

اجلاس سے خطاب میں شہباز شریف کا کہنا تھاکہ حکومت کے پیش کردہ معاشی اعدادوشمار ناقابل اعتبار اور قوم سے دھوکا ہیں، معیشت کی بربادی کے بعد معاشی غلط بیانی قوم کے مستقبل سے کھیلنے کے مترادف ہے۔

شہبازشریف نے مسلم لیگ ن کے 3 جون کو پری بجٹ سیمینار سے متعلق حکمت عملی پر مشاورت کی اور ہدایت کی کہ اکنامک ایڈوائزری کونسل موجودہ حالات میں عوامی مفادات کے تحفظ کیلئے تجاویزپیش کرے۔

اس حوالے سے اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ عوام کو آگاہ کرنا ضروری ہے کس طرح معاشی تباہی ملک پر مسلط کی جارہی ہے، ہم نے قوم کو سچائی بیان کرنی ہے تاکہ تاریخ میں گواہی رہے اور کل کوئی بہانہ نہ بناسکے۔

شہبازشریف کا کہنا تھاکہ اولین کوشش ہے عوام دشمن بجٹ کسی قیمت پر منظور نہ ہونے دیا جائے۔

حکومت کے پیش کردہ معاشی اعداد و شمار ناقابل اعتبار اور قوم سے دھوکا ہیں ، معیشت کی بربادی کے بعد معاشی غلط بیانی قوم کے مستقبل سے کھیلنے کے مترادف ہے ، مسلم لیگ ن کی اکنامک ایڈوائزری کونسل اجلاس سے خطاب میں شہباز شریف کا کہنا تھا کہ عوام کو آگاہ کرنا ضروری ہے کس طرح معاشی تباہی ملک پر مسلط کی جارہی ہے ، اولین کوشش ہے کہ عوام دشمن بجٹ کسی قیمت پر منظور نہ ہونے دیا جائے ، اجلاس میں بجٹ کے موقع پر عوامی مفادات کے تحفظ کے لیے سفارشات پر بھی غور۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

مینو